(I)امریکہ چین تنازع اور پاکستانی مفاد

گزشتہ پچہتر سالوں کے دوران، پاکستان کو سفارتی محاز پر جہاں خطے میں موجود ممالک سے تعلقات کے حوالے سے چیلنجز کا سامنا کرنا پڑا، آزادی کے بعد روس کے مقابلے میں امریکہ سے تعلقات پر جہاں تنقید بھی ہوتی رہی وہیں ایک موقف یہ بھی ہے کہ وہ فیصلہ درست تھا۔ جہاں امریکہ سے پاکستان کو سول اور ملٹری امداد ملتی رہی تو ساتھ ساتھ روس کی طرف سے پاکستان میں اسٹیل مل لگایا جانا اور سابق وزیراعظم ذوالفقار علی بھٹو دور میں سویت یونین سے قربت کی بھی یہی وجہ رہی کہ پاکستان کسی مخصوص بلاک کا حصہ نہیں بننا چاہتا تھا مگر پھر جب سویت یونین کی جانب سے افغانستان پر جنگ مسلط کی گئی تو اس عمل کو پاکستان کے وجود کو خطرہ قرار دیا گیا، اس بحث میں جائے بغیر کہ وہ خطرہ درست تھا یا نہیں مگر وہ شاید موقع تھا جب پاکستان واضع طور پر روس مخالف بلاک کا حصہ بنا۔ مزید پڑھیں۔۔۔۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here